دشمن چھوٹا ہو یا بڑا مہم جوئی کا منہ توڑ جواب دیا جائے گا، کسی کو بھی اپنے ایکشن کی غلط تشریح نہیں کرنے دینگے، آرمی چیف

راولپنڈی(اے پی پی)آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ہےکہ کسی کوبھی اپنے ایکشن کی غلط تشریح نہیں کرنے دیں گے، مسلح افواج ہرقسم کے چیلنجزسے نمٹنے کیلئے تیار ہیں، دشمن خواہ چھوٹا ہو یا بڑا، مہم جوئی کی تو منہ توڑ جواب دینگے،دشمن کو ناقابل برداشت نقصان اٹھاناپڑے گا،پاکستان امن پسند ملک اور دہشتگردی کیخلاف ہماری جنگ کامیابیوں سے ہمکنار ہے، افسوس ہے کہ عالمی برادری نے دہشتگردی کیخلاف پاکستان کی قربانیاں تسلیم نہیں کیں،پاک فضائیہ کی بہترین کارکردگی کے باعث دہشتگردی پر قابو پانے میں مدد ملی۔

آئی ایس پی آرکے مطابق پی اے ایف اصغرخان اکیڈمی میں گریجوایشن کیڈٹس کی تقریب کاانعقاد کیاگیا جس میں آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ نے بطورمہمان خصوصی شرکت کی اور پاس آؤٹ ہونے والے 129کیڈٹس کو بیجزلگائے،آرمی چیف نے اعزازی شمشیراور پوزیشن حاصل کرنے والے کیڈٹس اورسعودی عرب و اردن کی شاہی فضائیہ کے کیڈٹس کوبھی مبارکبادپیش کیں۔

اس موقع پر آرمی چیف کا کہناتھاکہ شاندارپریڈاور تربیت کااعلیٰ معیارپی اے ایف اکیڈمی کاطرہ امتیازہے،پاک فضائیہ ملک کے دفاع کااہم ترین عنصرہے،پی اے ایف کی بہترین کارکردگی کے باعث دہشتگردی پر قابو پانے میں مدد ملی۔ انہوں نے کہا کہ دہشتگردی کے خاتمے کیلئے پرعزم ہیں، پاکستان امن پسند ملک ہے ،کامیابی کاکوئی شارٹ کٹ نہیں ہوتا، پاکستان کو ہر قیمت پر دہشت گردی سے پاک کرنا ہمارا فرض ہے، دہشتگردی کے خلاف ہماری جنگ کامیابیوں سے ہمکنار ہے، دہشتگردی کیخلاف جنگ میں کامیابی سے پاکستان کوداخلی استحکام ملتاہے،امن کاقیام پاکستان میں استحکام اور سلامتی کاضامن ہے۔

انہوں نے کہاکہ پاک فضائیہ نے پاک افغان سرحد پردہشتگردوں کی پناگاہیں اور ٹھکانوں کوتباہ کیا،افسوس کے عالمی برادری نے پاکستان کی دہشتگردی کیخلاف قربانیوں کوتسلیم نہیں کیاجبکہ کسی بھی ملک نے پاکستان سے بڑھ کرقربانیاں نہیں دیں،پاکستان نے آپریشن ردالفسادکے ذریعے باقی ماندہ دہشتگردوں کے خاتمے کیلئے بھی اقدامات کئے ہیں۔