ٹھٹھہ: زائرین کی کشتی الٹ گئی، 10 افراد ہلاک

صوبہ سندھ کے زیریں علاقے ٹھٹھہ میں سمندر سے نزدیک ایک کشتی الٹ گئی جس کے نتیجے میں 10 افراد ہلاک ہوگئے۔
اطلاعات کے مطابق بد قسمت کشتی میں خواتین اور بچوں سمیت 50 افراد سوار تھے جو دریا پار مزار پر حاضری کے لیے جارہے تھے۔
ریسکیو ٹیمیں واقعے کی جگہ پر پہنچ گئیں اور اب تک دریا سے 10 لاشیں نکالی جاچکی ہیں جبکہ باقی افراد کی تلاش جاری ہے۔
ریسکیو ذرائع کا کہنا ہے کہ کشتی ٹھٹھہ کے قریبی علاقے بوھارا میں دریا پار مزار پر حاضری کے لیے جاری تھی کہ ساحل سے کچھ دور حادثہ پیش آیا۔ذرائع کے مطابق ہلاک ہونے والوں بچے اور خواتین بھی شامل ہیں۔
یاد رہے کہ رواں برس فروری میں سندھ کے شمالی ضلعے لاڑکانہ سے قریب دریائے سندھ میں بلہڑیجی کے مقام پر کشتی ڈوبنے کا واقعہ پیش آیا تھا جس میں 10 سے زائد فراد ہلاک ہوگئے تھے۔
کشتی میں کم سے کم 35 افراد سوار تھے، جن میں سے 17 افراد کو فوری طور پر ریسکیو کرلیا گیا تھا، جب کہ کچھ افراد اپنی مدد آپ کے تحت پانی سے نکلنے میں کامیاب ہوئے تھے۔