’ہماری سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات سے لڑائی اس خاتون کی وجہ سے ہوئی‘ قطر نے اعلان کردیا، پوری دنیا حیران رہ گئی

دوحہ(مانیٹرنگ ڈیسک) کچھ عرصہ قبل سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات نے قطر سے تمام تر تعلقات منقطع کر لیے تھے اور مبینہ طور پر اس پر حملے کی منصوبہ بندی بھی کی۔ اب قطر نے ان برادرملکوں کے ساتھ لڑائی کی ایسی وجہ بیان کر دی ہے کہ سن کر پوری دنیا دنگ رہ گئی۔میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق قطر کے وزیرخارجہ محمد بن عبدالرحمان الثانی کا کہنا ہے کہ ” ہمسایہ خلیجی ممالک کے ساتھ ہماری لڑائی کی وجہ ایک خاتون تھی۔ یہ خاتون متحدہ عرب امارات کے ایک اپوزیشن لیڈر کی اہلیہ تھی جو 2013ءمیں امارات میں سیاسی گرفتاری سے بچنے کے لیے قطر آئے اور وہاں سے برطانیہ چلے گئے۔“

محمد ثانی نے بتایا کہ ”برطانیہ نے اس خاتون کے شوہر کو پناہ دے دی لیکن خاتون قطر میں ہی کچھ وقت کے لیے رہائش پذیر ہو گئی کیونکہ اس کے رشتہ دار وہاں رہتے تھے۔ پھر جب اس نے قطر میں واقع سفارتخانے میں ویزے کی تجدید کے لیے درخواست دی تو وہ مسترد کر دی گئی۔ ادھر اماراتی حکومت نے قطر سے مطالبہ کیا کہ اس خاتون کو ملک بدرکرکے ان کے حوالے کیا جائے لیکن قطر نے انکار کر دیا، جس پر یہ یہ لڑائی شروع ہوئی۔“انہوں نے دعویٰ کیا کہ ”اس جھگڑے کے آغاز پر سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے قطری حکومت سے کہا تھا کہ اگر وہ اس خاتون کومتحدہ عرب امارات کے حوالے کر دے تو کوئی جھگڑا باقی نہیں رہے گا۔“ رپورٹ کے مطابق بعدازاں برطانیہ نے اس خاتون کو بھی ویزا دے دیا اور وہ اپنے شوہر کے پاس لندن چلی گئیں۔“