دبئی میں ایک چھوٹی سی غلطی نے ان دونوں دوستوں کو 11 کروڑ روپے کا مالک بنادیا، کیا غلطی تھی؟ جان کر آپ کو بھی قسمت پر رشک آئے گا

دبئی سٹی (مانیٹرنگ ڈیسک) کبھی کبھار قسمت انسان پر یوں بھی مہربان ہو جاتی ہے کہ جس چیز کو وہ بے وقعت سمجھ رہا ہوتا ہے وہی اس کے لئے سونے کا ڈھیر بن جاتی ہے۔ بھارت سے تعلق رکھنے والا نوجوان پنٹو پال تھومانا اور اس کا دوست فرانسس سباسچین بھی اس بات پر افسردہ تھے کہ اپنی پسند کا لاٹری نمبر نا ملنے پر انہوں نے بلاوجہ ہی ایک اور نمبر خرید لیا تھا، لیکن جب قرعہ اندازہ ہوئی تو دونوں دیوانہ وار اپنے ’ناپسندیدہ‘ نمبر کو چومنے لگے۔ دبئی ڈیوٹی فری ملینیم ملینیر قرعہ اندازی میں یہ دونوں دوست 10 لاکھ ڈالر (تقریباً ساڑھے گیارہ کروڑ پاکستانی روپے) کے مالک بن گئے ہیں۔

گلف نیوز کے مطابق بھارتی ریاست کیرالہ سے تعلق رکھنے والے 36 سالہ پنٹو پال اور اس کے دوست فرانسس سباسچین نے لاٹری کا ٹکٹ خریدنے کا فیصلہ کیا لیکن کسی تکنیکی خرابی کی وجہ سے ان کی پسند کا نمبر نہیں نکلا۔ دوسری ٹرائی پر 2465 نمبر نکلا جو انہیں پسند تو نا آیا البتہ بادل ناخواستہ خرید لیا۔ بعد ازاں وہ اپنے فیصلے کو غلط قرار دیتے رہے لیکن ان کے وہم و گمان میں بھی نہیں تھا کہ یہی ’غلطی‘ ان کی زندگی بدلنے والی تھی۔

گزشتہ روز جب پنٹو کو لاٹری جیتنے کی خوشخبری سنانے کے لئے کال کی گئی تو وہ سمجھے کہ ان سے مذاق کیا جارہا ہے۔ پنٹو نے بتایا ”میں سمجھا کہ میرا کوئی دوست کال کرکے میرے ساتھ شرارت کررہا ہے لیکن پھر مجھے کئی اور لوگوں کے میسج اور کال آنا شروع ہوگئیں۔ ان لوگوں نے یہ خبر پہلے ہی سن لی تھی۔“

فرانسس کا کہنا تھا کہ ان کی فیملی کو کافی مالی مشکلات کا سامنا تھا جو اب بالکل ختم ہوگئی ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ ابھی انہوں نے فیصلہ نہیں کیا کہ وہ اس رقم کا کیا کریں گے تاہم وہ یہ جانتے ہیں کہ اپنے دو بچوں کی اچھی تعلیم ان کی سب سے پہلی ترجیح ہوگی۔ پنٹو اور فرانسس بچپن کے دوست ہیں اور ریات کیرالہ میں بھی ہمسائے تھے جبکہ امارات میں بھی اکٹھے کام کرتے ہیں۔ جس دن یہ اچھی خبر ملی اسی دن فرانسس کی بیوی کی سالگرہ بھی تھی۔ ان کا کہنا ہے کہ سالگرہ کا اس سے اچھا تحفہ کوئی نہیں ہوسکتا تھا۔