یہ جو دہشت گردی ہے اس کے پیچھے وردی نہیں بلکہ واشنگٹن سے ۔۔۔آئی ایس آئی کے سابق اعلیٰ افسر اور ریٹائرڈ میجر کے تہلکہ خیز انکشافات

اسلام آباد(ویب ڈیسک ) ممتاز دفاعی مبصر اور آئی ایس آئی اسلام آباد کے سابق سٹیشن چیف میجر(ر) محمد عامر کاکہنا ہے پاکستان سے نفرت کرنیوالا مضطرب ٹولہ پشتون تحفظ موومنٹ کو اپنی امیدوں کا نیا مرکز اورمورچہ بنانا چاہتا ہے، دہشتگردی کے پیچھے وردی کا نعرہ واشنگٹن سے آیا ہے ، جنگ سے بات چیت کرتے ہوئے

انہوں نے کہا پی ٹی ایم کے نوجوانوں کو میں پہلے ہی خبردار کرچکا ہوں یہ وہ لوگ ہیں جو پہلے مسلم لیگ (ن) کی چادر میں گھس گئے پھر کوئٹہ جاکر کہنے لگے دیکھو ہم نے پنجابیوں کو فوج سے لڑادیا،یہ قبائلی اور پختون نوجوانوں کی صفوں میں گھس کر پختونوں کے بارے میں ایسا ہی اعلان کرنے کے خواہشمند ہیں ،یہ صرف اپنے غیرملکی خریداروں کی نظروں میں اپنا ریٹ بڑھانے کی کوشش ہے، میجر عامر نے کہا پاکستان ہمارا گھر، ہمارا حجرہ اور ہماری عبادتگاہ جبکہ فوج اسکی محافظ ہے، ڈیڑھ لاکھ امریکی فوج 40 ممالک کیساتھ ملکر جو امن افغانستان کو نہ دے سکی وہ پاکستانی فوج نے تن تنہا لڑ کرہمیں دیدیا ، سب جانتے ہیں کہ فوج نے اپنے سنجیدہ اور خوبرو نوجوانوں کو قربان کرکے یہ کارنامہ انجام دیا،میں پوچھتا ہوں جب مشرف امریکی جنگ پاکستان لائے اور ہمارے وطن بالخصوص پختون علاقے میں تباہی اور بربادی پھیلائی یہ لوگ اس وقت نہ صرف خاموش بلکہ در پر دہ اس کیساتھ تھے، آ ج جبکہ فوجی قیادت کی کامیاب منصوبہ بندی سے ہم مکمل امن کے قریب ہوچکے ہیں اچانک یہ نعرہ زن کہاں سے آگئے، جب موجودہ فوجی قیادت فوجی آپریشن کےاثرات بد کی تلافی کررہی ہے تو پھر تازہ مہم جوئی سمجھ سے بالا ہے، کیا یہ موجودہ فوجی قیادت نہیں تھی جس نے کہا اب دنیا ڈومور کرے اور ہم افغانستان کی جنگ پاکستان نہیں لاسکتے، انہوں نے کہا پی ٹی ایم کے نوجوانوں کو یہ بات ذہن نشین رکھنی چاہئے کہ پختونوں میں قوم پرستی، عصبیت،حقوق کی پامالی یاپاکستان سے بد گمانی کی مہم کو پہلے پذیرائی ملی نہ آئندہ کوئی امکان ہے، پاکستان پختونوں کا واحد سائبان ہے ، پختونوں کے مورچے سے نکلنے والی ہر گولی پاکستان کے دشمنوں کے سینوں کا رخ کرتی ہے، پی ٹی ایم نے اگر زندہ رہنا ہے تو پاکستان زندہ باد کہنا ہوگا اگر واشنگٹن او ر دہلی سے آئے نعرے لگتے رہے تو پھر ایک اور المیہ ہی آئیگا۔