شہید کی بیٹی کی شادی ،، پولیس دیکھ کر براتیوں کی ہوائیاں اڑ گئیں ڈی پی او عمر سعیدنے پھولوں کے گلدستے دیئے تو بھنگڑے شروع۔

لاہور(سپیشل رپورٹ)وہاڑی میں شادی کی تقریب میں باراتی ہر طرف پولیس کے باواردی افسران و اہلکاروں کو دیکھ کر پریشان ہو گئے جبکہ بینڈ باجے والوں کی بھی بینڈ بج گئی ۔باراتیوں کو جب علم ہوا کہ شہید ہیڈ کانسٹیبل حق نواز کی بیٹی کی شادی کے انتظامات وہاڑی پولیس کے ڈی پی اوعمر سعید ملک نے کئے ہیں تو سب کے چہرے خوشی سے کھل اٹھے اور انہوں نے خوب بھنگڑئے ڈالے ۔ پولیس افسران نے پھولوں مہمانوں کو پھولوں کے گلدستے پیش کئے ۔بتایا گیا ہے کہ وہاڑی پولیس کے ہیڈ کنسٹیبل حق نواز 1998ء میں پپلی اڈہ میں ڈاکوؤں سے پولیس مقابلہ کرتے ہوئے شہید ہو گئے تھے جس کے بعد سے وہاڑی پولیس انکے اہل خانہ کی بہترین کفالت کا سلسلہ جاری رکھے ہوئے ہے ۔ گذشتہ روز وہاڑی پولیس کی جانب سے اپنے بہادر سپوت ہیڈ کانسٹیبل حق نواز کی بیٹی اور بیٹے کی شادی کی پروقار تقریب کا اہتمام کیا گیا جس میں ڈی پی او وہاڑی عمر سعید ملک نے تمام مہمانوں کوخوش آمدید کہا ، اس موقع پرڈی پی او وہاڑی نے شہید کی بیٹی کو شادی کے حوالے سے گفٹ اور 1لاکھ کا چیک دیا اور اس موقع پر انہوں نے کہا کہ زندہ اور غیور اقوام اپنے شہداء کو ہمیشہ یاد رکھتی ہیں وہاڑی پولیس کے جانبازشُہداء پولیس کافخر ہیں اوروہاڑی پولیس ہر موقع پر ان کے وارثان کے ساتھ شانہ بشانہ موجود رہے گی ۔شادی کی تقریب میں مہمان اس بات پر ہی تبصرے کرتے رہے کہ ڈی پی او وہاڑی کے دلہن پر دست شفقت نے باپ کی کمی کو محسوس نہیں ہونے دیا۔