بریکنگ نیوز:48 گھنٹوں کے اندر اندر اسمبلیاں ٹوٹنے کی خبر آتے ہی ملک میں ہلچل،نگران وزیر اعظم کون ہو گا؟نامور خاتون کا نام بھی سامنے آ گیا

اسلام آباد (ویب ڈیسک) باخبر ذرائع نے دعویٰ کیا ہے کہ اسمبلیاں اگلے 48گھنٹے میں ٹوٹ سکتی ہیں اور نگران وزیر اعظم کے حوالے سے اقوام متحدہ میں پاکستان کی سفیر ملیحہ لودھی اور سابق سیکرٹری الیکشن کمشن اشتیاق احمد خان کے نام بھی آ گئے اور اس حوالے سے حکومت اور

اپوزیشن میں اتفاق رائے جلد ہو جائے گا۔ یہ اطلاعات بھی ہیں کہ ملیحہ لودھی اسلام آباد پہنچ چکی ہیں تاہم آزاد ذرائع سے تصدیق نہیں ہو سکی۔ایوان بالا میں ارکان سینٹ نے ملک کی موجودہ صورتحال پر بحث میں حصہ لیتے ہوئے کہا ہے کہ کوئی سیاسی جماعت، کوئی ادارہ احتساب نہیں چاہتا، سب ایک دوسرے کو بلیک میل کر رہے ہیں، ادارے اپنی حدود میں کام کریں تو ملک میں ٹکراﺅ کی کوئی کیفیت پیدا نہیں ہو گی، ایف اے ٹی ایف کا اجلاس قریب آنے پر میاں نواز شریف کا نان سٹیٹ ایکٹرز کے حوالے سے بیان ملک کیلئے مزید مشکلات پیدا کرے گا، نواز شریف کے بیانیہ پر انڈیا میں شادیانے بجائے جارہے ہیں، انہوں نے اپنی ریاست کو ملزم قرار دے دیا،ملک و قوم کے مستقبل کے خاطر اپنا بیان واپس لیں، اس ملک میں سب سیاسی جماعتیں محب وطن ہیں، آئین توڑنے والوں کو سزا ملنی چاہیے۔ انڈیا نے آج تک ممبئی کے حوالے سے کوئی ثبوت پاکستان کو فراہم نہیں کئے، بڑے میاں اپنے موقف پر ڈٹے ہوئے ہیں اور چھوٹے میاں صفایاں پیش کررہے ہیں۔ ایوان بالا کے اجلاس میں سینیٹر عثمان کاکڑ اور سردار اعظم خان موسیٰ خیل نے ملک کی موجودہ سیاسی صورتحال پر بحث کی تحریک پیش کی۔ ڈپٹی چیئرمین سینیٹ سلیم مانڈوی والا نے اس ضمن میں کسی حکومتی رکن سے بات کرنے کا کہا ،جس پر وزیر پارلیمانی امور شیخ آفتاب احمد نے کہا کہ مجھے تو کوئی اعتراض نہیں لیکن یہ تو بتائیں کہ یہ کون سی صورتحال زیر بحث لانا چاہتے ہیں؟جس پر سینیٹ ہال میں قہقہے بلند ہوئے۔