سعودی ولی عہد حملے میں زخمی۔۔۔ تہلکہ خیز دعویٰ سامنے آگیا

ایرانی اور روسی میڈ یا نے دعویٰ کیا ہے کہ ایک حملے کے نتیجے میں سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان اچانک زخمی حالت میں لاپتہ ہو گئے ہیں ۔تفصیل کے مطابق ایرانی میڈ یا نے دعویٰ کیا کہ سعودی ولی عہد کے زخمی ہونے سے متعلق خبر سعودی خفیہ رپورٹ سے ملی اور یہ خفیہ رپورٹ ایک عرب…
ان کا کہنا تھا کہ 21اپریل کو شاہی محل پر حملے کے بعد سے سعودی ولی عہد لاپتہ ہیں اور وہ اس حملے کے نتیجے میں زخمی بھی ہوئے تھے ۔ایرانی میڈ یا کے مطابق حملے کے بعد سعودی ولی عہد کی سرکاری سطح پر کوئی تصویر جاری نہیں ہوئی۔
ادھر روسی میڈ یا نے بھی ایرانی میڈ یا رپورٹ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ سعودی ولی عہد 21اپریل کے حملے کے بعد سے منظر عام سے غائب ہیں ۔ دوسری جانب سعودی سرکاری حکام نے شہزادہ محمد بن سلمان سے متعلق اطلاعات کی تصدیق نہیں کی۔
واضح رہے کہ 21اپریل کی رات کو اچانک سوشل میڈ یا پر ایک افواہ پھیلنا شروع ہو گئی تھی کہ سعودی عرب میں شاہی محل پرحملہ ہوا ہے اور گولیوں کی آوازیں بھی آرہی ہیں، اس افواہ کے ساتھ کچھ ویڈیوز اور تصاویر بھی سامنے آئیں لیکن کچھ ہی دیر بعد سعودی حکومت نے باضابطہ اعلان کرتے ہوئے بتا یا کہ شاہی محل پر حملہ نہیں ہوا بلکہ ایک مشکوک ڈرون شاہی محل کے اوپر پرواز کررہا تھا جسے سعودی سیکیورٹی فورسز نے مار گرا یا تھا ۔