سیاست ہوتی رہتی ہے ، ملکی سلامتی کو داؤ پر نہیں لگایا جاتا، شرجیل میمن

سابق وزیراطلاعات سندھ شرجیل میمن نے سابق وزیراعظم نواز شریف کے بیان کو نامناسب قرار دیتے ہوئے کہا کہ سیاست ہوتی رہتی ہے لیکن ملکی سلامتی کو داؤ پر نہیں لگایا جاتا۔
تفصیلات کے مطابق محمکہ اطلاعات میں پونے چھ ارب کرپشن کیس میں پیشی کے موقع پراحتساب عدالت کے باہر میڈیا سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے شرجیل میمن نے کہا کہ نوازشریف کے بیان سے دنیا میں پاکستان کی تذلیل ہورہی ہے،سیاست ہوتی رہتی ہے ، ملکی سلامتی کو داؤ پر نہیں لگایا جاتا۔
اس موقع پر صحافی نے سوال کیا کہ آپ کی درخواست ضمانت اورنظر ثانی کی درخواست مستردہوگئی،کیا کہیں گے؟جس کے جواب میں شرجیل میمن نے کہا کہ درخواست ضمانت مسترد ہونے پر کیا کہہ سکتا ہوں، خود سپریم کورٹ نے کہا جو ٹرائل کورٹ میں مقدمات کا سامنا کر رہا ہو اسے ضمانت کی ضرورت نہیں ہے، سپریم کورٹ کے فیصلے کی مثال کیپٹن (ر)صفدر کا کیس ہے۔
سابق صوبائی وزیر اطلاعات کا کہناتھا کہ ملک میں دو قانون موجود ہیں،میری درخواست ہے اس قانون کو ملک کے دیگر صوبوں کی طرح سندھ میں بھی ہونا چاہئے ۔