ڈی جی ایل ڈی اے آمنہ کا ون ونڈو سیل پر چھاپہ سائلین کو تنگ کرنے پر افسران کو جھاڑ پلا دی

لاہور(رپورٹ:اصغر بھٹی) لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی کی حال ہی میں تعینات ہونے والی ڈائریکٹر جنرل ایل ڈی اے آمنہ عمران خان نے گزشتہ روز “ون ونڈو سیل”کا اچانک دورہ کیا اور وہاں پر عام سائیلین اور مختلف ڈائریکٹوریٹ میں آنے والے کاموں کے سلسلے میں شہریوں سے ان کے مسائل سنے اور ان کے فوری حل کے لئے وہ ان سے گھل مل بھی گئیں اور زیر التواء درخواستوں اور ان کے کاموں کے حل طلب بارے میں ان سے پوچھ گچھ کی اور بے جا اعتراضات لگانے والے افسران سے تفصیلی رپورٹ بھی طلب کر لی اور چند ایک افسران کی تو انہوں نے موقع پر ہی سرزنش بھی کر ڈالی۔ انہوں نے کہا کہ”ون ونڈو سیل”کو فاسٹ ٹریک پر چلایا جائے گا اور انہوں نے کہاکہ شہریوں کی درخواستوں پر غیر ضروری اعتراضات بلکل بھی نہ لگائے جائیں۔افسران اور ملازمین شہریوں کی خدمت کو شعار بنانے میں اپنا اپنا بھرپور کردار ادا کریں اور بے جاسائیلین کو تنگ کرنے والوں کی اب یہاں ایل ڈی اے کے محکمہ میں کوئی گنجائش نہیں ہے۔شہریوں کوان کی درخواستوں پر اعتراضات کے بارے میں ایک ہی بار آگاہ کردیا جائے اور بار بار چکر نہ لگوائے جائیں۔تمام ڈائریکٹوریٹ ہر ہفتے نپٹائی جانے والی درخواستوں کے بارے میں اپنی کارکردگی کی رپورٹ پیش کریں۔انہوں نے کہا کہ شہریوں کو ریلیف دینے کے لئے ضروری ہوا تو میں خود”ون ونڈو”پر کام کروں گی۔
ڈائریکٹر جنرل ایل ڈی اے نے ون ونڈو سیل کا معائنہ بھی کیا وہ مختلف کاﺅنٹرز پر گئیں اور وہاں آنے والے شہریوں سے ان کے مسائل معلوم کر کے ان کے فوری حل کے لئے موقع پر ہی احکامات جاری کئے-اس موقع پر ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل (ہاﺅسنگ)ذیشان شبیر رانااور دیگرز ڈائریکٹوریٹ کے متعلقہ تمام ڈائریکٹرز بھی اس موقع پر موجود تھے۔ایل ڈی اے ون ونڈو سیل پر سینئرسٹیزنز (بزرگ افراد)اور خواتین کے لئے خصوصی کاﺅنٹرز قائم کر دیئے گئے ہیں۔پراپرٹی کی ملکیتی دستاویزات کی آن لائن تصدیق کے لئے پنجاب لینڈ ریکارڈ اتھارٹی کا کاﺅنٹر بھی بنا دیا گیا ہے۔آمنہ عمران خان نے کہا کہ شہریوں کی درخواستوں پرکم سے کم وقت میں عمل درآمد کے لئے تمام ممکن اقدامات کئے جائیں گے۔انہوں نے کہا کہ وہ ذاتی طور پر ون ونڈو سیل کی کارکردگی کی باقاعدگی سے نگرانی بھی کریں گی تا کہ پلاٹوں کی ٹرانسفر کے لئے این او سی کے اجرا ، نقشوں کی منظوری اور دیگر امور کے لئے آنے والوں کے جائز اور قانونی کاموں کی انجام دہی بروقت یقینی بنائی جا سکے۔انہوں نے کہا کہ عملے کی طرف سے تاخیری حربوں اور بدعنوانی کی شکایات دور کرنے کے ساتھ ساتھ غیر متعلقہ افراد کا عمل دخل بھی ختم کیا جائے گا۔ڈائریکٹر جنرل نے یہ بھی کہا کہ میڈیا کے توسط اور ان کی مثبت کارکردگی کو بھی رد نہیں کیا جائے گا اور میڈیا کو بھی چاہیے کہ وہ اپنی ذمہ داریوں کو احسن طریقے سے ادا کرے اور بے جا تنقید کرنے کی بجائے محکمہ کی بہتری کے لئیے اپنی اچھی تجاویز بھی دیں تاکہ اس پر بھی عمل درآمد کروایا جائے گا انہوں نے کہا کہ میں جب تک بھی ہوں اس محکمہ کی بہتری اور عوام کے جائز کاموں کو اللہ کی رضا اور خوشنودی کے لیے کیے جائنگے۔ڈی جی ایل ڈی اے نے ایک بزرگ سید راشد علی جو واپڈا کے بیمار ریٹائرڈ ملازم تھےاور وہ 11 ماہ سےپلاٹ نمبر 430 طارق بلاک نیو گارڈن ٹاؤن این او سی لینے کے لئیے دھکے کھا ریے تھے ان کی بڑی توجہ سے بات سنی اور متعلقہ افسران کو ان کے کام کو فوری طور پر کرنے کے احکامات جاری کئے اور ان افسران کو جھاڑ بھی پلائی۔