’’بشیرا‘‘ ان ٹربل نواز شریف کی لاہور آمد پولیس و بیوروکریسی کو پریشانیاں شہباز شریف نے پولیس افسران کی فرستیں بنانے کا حکم پولیس افسر کو دوران میٹنگ چکر آگئے

لاہور(رپورٹ:اسد مرزا)لاہور میں سابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف اور مریم نواز کی لاہور آمد انکی گرفتاری اور ن لیگ کی جانب سے اپنے قائدین کے استقبال کے لئے ریلی کے دوران امن ومان کے اندیشہ کے پیش نظر پولیس کے اعلی افسران اور بیوروکریسی گو مگو کا شکار ہیں ۔ذرائع کا کہناہے کہ پنجاب پولیس کے ایسے افسران جو ن لیگ کی ریلی میں رکاوٹ اور

کارکنوں کی گرفتاریوں کے احکامات جا ری کر رہے ہیں انہیں مختلف طریقوں سے پیغامات بھجوائے جا رہے ہیں کہ وہ ایسے کاموں سے باز رہیں۔ذرائع نے دعوی کیا ہے کہ اعلی پولیس حکام کی جانب سے ن لیگ کے کارکنوں کی استقبال سے قبل پکڑ دھکڑ کا حکم ملنے پرایک پولیس افسر نے میٹنگ طلب کی ابھی ن لیگ کے کارکنوں کی گرفتاریوں کا حکم نہ دے پائے کہ اسی دوران انہیں چکر آگئے اور طبعیت خراب ہو گئی ماتحت افسران نے انہیں فوری میڈیکل چیک اپ کرانے کامشورہ دیا لیکن وہ بغیر کسی فیصلے کے روٹین کی باتین کر کے اٹھ گئے ۔میٹنگ میں شریک ایک پولیس افسر کا کہنا تھا کہ صرف پولیس ہی نہیں بیوروکریسی بھی سخت دباؤ میں ہے کہ ناجانے اونٹ کس کروٹ بیٹھے گا