میاں بیوی نے گھر کرائے پر دے دیا، جب واپس لیا تو فرش پر جگہ جگہ پراسرار نشانات، کرایہ دار یہاں کیا شرمناک ترین کام کرتے رہے؟ بالآخر حقیقت سامنے آئی تو ہوش اُڑگئے کیونکہ۔۔۔

ایمسٹرڈیم(نیوز ڈیسک) دنیا میں بے شمار لوگ ہیں جو گھر کرائے پر دیتے ہیں اور ان میں سے بہت سے ہیں جن کے گھروں کو کرایہ دار کچھ اچھی حالت میں چھوڑ کر نہیں جاتے۔ نیدرلینڈز سے تعلق رکھنے والے ایک جوڑے نے بھی اپنا گھر کرایہ پر دیا لیکن جب کرایہ دار رخصت ہوئے تو پیچھے کچھ ایسے نشان چھوڑ گئے کہ جن کا تصور رکر کے ہی یہ بدقسمت جوڑا متلی محسوس کرنے لگتا ہے۔

دی مرر کے مطابق اس میاں بیوی کا کہناہے کہ انہوں نے ایک اچھی ایجنسی کے ذریعے اپنا گھر کرایہ پر دیا تھا لیکن جب غیر متوقع طور پر کرایہ دار رخصت ہو گئے تو وہ اپنے گھر کے معائنے کے لئے پہنچے۔ درصل ان کا گھر پولیس کی مداخلت سے خالی ہوا تھا کیونکہ کرایہ داروں کے بارے میں پولیس کو کچھ اعتراضات تھے۔ اپنے گھر پہنچنے پر اس جوڑے کو بستر کی چادروں پر، صوفوں پر، کرسیوں پر، غرضیکہ ہر جگہ عجیب و غریب داغ نظر آئے۔ وہ ان کی وجہ جاننے سے قاصر تھے البتہ یہ بہت ہی بدبو دارتھے۔

اسی دوران پولیس نے بات چیت کے لئے ان سے رابطہ کیا اور تب ہی ان کے گھر پر بیتنے والی اصل کہانی ان کے سامنے آئی۔ پولیس نے بتایا کہ ان کے کرایہ دار گھر میں ایک قحبہ خانہ چلا رہے تھے۔ ہر کمرے میں جسم فروش لڑکیاں اپنے گاہکوں کو خدمات فراہم کر رہی تھیں اور یہی وجہ تھی کہ چادروں، تکیوں، صوفوں، کرسیوں وغیرہ پر بدبودار داغ پڑ چکے تھے۔

اس شرمناک انکشاف نے بدقسمت جوڑے کا دل توڑ کر رکھ دیا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ جب وہ تصور کرتے ہیں کہ ان کے بستر اور فرنیچر پر اجنبی لوگ بے حیائی کے مرتکب ہوتے رہے ہیں تو ان کا دل بھر آتا ہے۔ اب وہ اپنے گھر میں جانے سے گریزاں ہیں اور کہتے ہیں کہ جب تک اس کی مکمل صفائی نہیں ہو جاتی وہ اس کا رخ نہیں کریں گے۔