Home » سام سنگ کا فولڈ ایبل فون گلیکسی ایف 2 دن کی دوری پر

تازہ ترین

Advertisment

مقبول خبریں

ٹیکنالوجی

سام سنگ کا فولڈ ایبل فون گلیکسی ایف 2 دن کی دوری پر

سام سنگ کا پہلا فولڈ ایبل اسمارٹ فون گلیکسی ایف یا گلیکسی ایکس رواں ہفتے سامنے آرہا ہے اور اب کمپنی نے اس کی جانب اشارہ دے دیا ہے۔
سام سنگ کی جانب سے اس فولڈ ایبل فون کی تیاری پر کئی برسوں سے کام کیا جارہا ہے اور ہر سال ہی اسے متعارف کرانے کی رپورٹس سامنے آتی ہیں مگر اب کمپنی آخرکار اسے پیش کرنے کے لیے تیار ہے۔
سام سنگ کی سالانہ ڈویلپر کانفرنس بدھ سے امریکا میں شروع ہورہی ہے اور اس سے پہلے کمپنی نے فیس بک اور ٹوئٹر پر اپنی پروفائل تصویر کو اس فولڈ ایبل فون کے ٹیزر سے بدلا ہے۔
اس ٹیزر تصویر سے ہٹ کر سام سنگ فی الحال باضابطہ طور پر اس اسمارٹ فون کے بارے میں کچھ اعلان نہیں کیا اور امکان ہے کہ کانفرنس کے دوران ہی تفصیلات سامنے آئیں گی۔
سام سنگ کے چیف ایگزیکٹو آفیسر نے رواں سال اگست میں کہا تھا کہ کمپنی اپنے فولڈ ایبل فون جلد متعارف کرانے کی تیاری کررہی ہے تاکہ وہ دنیا کا پہلا ایسا فون بن سکے۔
تاہم سام سنگ دنیا کے پہلے کمرشل فولڈ ایبل فون کی دوڑ میں پیچھے رہ گئی ہے کیونکہ ایک کمپنی رائل نے گزشتہ ہفتے فلیکس پائی نامی 7.8 انچ کا فولڈ ایبل فون متعارف کرادیا تھا جس میں 3 اسکرینیں ہیں۔
مگر سام سنگ کے لیے اچھی خبر یہ ہے کہ گزشتہ ہفتے متعارف کرائے جانے والا ممکنہ طور پر چین سے باہر کسی اور ملک میں پیش نہیں کیا جائے گا، جبکہ ڈیزائن کے لحاظ سے بھی وہ متاثر کن نہیں۔
سام سنگ کا گلیکسی ایف یا ایکس جو بھی اس کا نام ہوگا، ممکنہ طور پر 7.3 انچ اسکرین کے ساتھ ہوگا جو کہ بند ہوکر 4.3 انچ ڈسپلے کی شکل اختیار کرلے گا جبکہ اس ڈیوائس میں کاسٹیوم انٹرفیس بھی دیئے جانے کا امکان ہے۔
ٹیبلیٹ کی شکل میں تو اسے جیب میں رکھنا ممکن نہیں ہوگا مگر اسمارٹ فون کی شکل میں اسے جیب میں رکھنا آسان ہوگا۔
اس ٹیبلٹ اور فون کے مکسچر میں سام سنگ کی نیکسٹ جنریشن 7nm چپ یا کوالوم اسنیپ ڈراگون ایس او سی پراسیسر دیا جاسکتا ہے جبکہ اس کے لیے سام سنگ اور گوگل نے اینڈرائیڈ کا خصوصی ورژن بھی تیار کیا ہے۔
رواں ہفتے متعارف کرائے جانے کے بعد اس فون کو اگلے سال کسی وقت فروخت کے لیے پیش کیے جانے کا امکان ہے اور ڈویلپر کانفرنس میں اس ڈیوائس کے بارے میں ابتدائی تفصیلات کا اعلان کیا جائے گا۔
ویسے یہ جان لیں کہ سام سنگ کا یہ فون جب بھی صارفین کے لیے دستیاب ہوا تو محدود تعداد میں ہوگا اور اس کی قیمت 2 ہزار ڈالرز تک ہونے کا امکان ہے۔