پی سی بی میں طاقت کا توازن بدلنے لگا، ایم ڈی کا تقرر

پی سی بی میں طاقت کا توازن بدلنے لگا، منیجنگ ڈائریکٹر کا عہدہ وسیم خان کو سونپنے کا اعلان کردیا گیا۔

چیئرمین پی سی بی احسان مانی بورڈ میں نیا اسٹرکچر اور شفافیت کا نظام متعارف کرانا چاہتے ہیں،انھوں نے پہلی پریس کانفرنس میں ہی واضح کردیا تھا کہ وہ ایگزیکٹیو پاورز اپنے ہاتھ میں رکھنے کے حق میں نہیں ہیں،انتظامی امور کیلیے ایم ڈی کا تقرر کیا جائے گا، چیئرمین کی ذمہ داری پالیسی سازی اور امور کی نگرانی ہوگی۔

گزشتہ دنوں اس عہدے کیلیے ڈاکٹر نعمان نیاز اور وسیم خان کے نام گردش میں تھے، بالآخر قرعہ فال وسیم خان کے نام نکلا اور انھیں ایم ڈی کا عہدہ سونپنے کا باضابطہ اعلان کردیا گیا، بزنس ایڈمنسٹریشن میں ڈگری ہولڈر وسیم خان کاؤنٹی کرکٹ میں ڈربی شائر، سسیکس اور ورکشائر کی نمائندگی کرچکے،وہ آسٹریلیا، نیوزی لینڈ اور جنوبی افریقی میدانوں پر بھی کھیل چکے ہیں، انھوں نے 58فرسٹ کلاس میچز میں حصہ لیا،بینک آف انگلینڈ کے ایک پروجیکٹ پر کام کیا۔

گزشتہ 7سال سے ای سی بی اینٹی کرپشن کے رکن ہیں،وہ لیسٹر شائر کاؤنٹی کے چیف ایگزیکٹیو کی حیثیت سے کام کر چکے جبکہ انگلش بورڈ کے تحت ڈومیسٹک کرکٹ میں بہتری کیلیے بنائے جانے والے ورکنگ گروپ کے سربراہ بھی رہے۔

وسیم خان کا کہنا ہے کہ پی سی بی کے ساتھ ذمہ داری کو ایک چیلنج کے طور پر قبول کیا، میری جڑیں پاکستان میں ہیں،فیملی کے ساتھ یہاں منتقل ہونے کے حوالے سے پُرجوش ہوں۔

چیئرمین پی سی بی احسان مانی نے کہاکہ وسیم خان جلد پی سی بی کو جوائن کریں گے، ہم بورڈکی تشکیل نو کیلیے کارروائی شروع کرچکے، امید ہے کہ وسیم خان کے تجربے کی مدد سے انتظامی امور میں نمایاں بہتری دیکھنے میں آئے گی، ان کی پہلی ذمہ داری ڈومیسٹک کرکٹ کے اسٹرکچر میں تبدیلی ہوگی۔ بورڈ کے مطابق وسیم خان کی جانب سے فروری میں عہدہ سنبھالنے کا امکان ہے۔