صدر مالخانہ:غیر ملکی شراب کے2 کنٹینرزملزموں کوفروخت اہلکاروں کا اعتراف ،،کیس اینٹی کرپشن کے سپرد کرنے کا فیصلہ ،، ڈی ایس پی لیگل پریشان

لاہور (رپورٹ :اسد مرزا)لاہور پولیس کے صدر مالخانے میں غیر ملکی شراب کے دو کنٹینر زلاکھوں روپے کے عوض فروخت کر کے رقم تقسیم کر لی جبکہ درجنوں بوتلیں اسوقت کے ماتحت پولیس افسروں اور اپنے ایماندار باس کے دوستوں میں بھی تقسیم کی گئیں ۔یہ انکشاف گرفتار پولیس اہلکاروں نے تفتیشی ٹیم کے سامنے کیا۔ اس حوالے سے جب سپیشل رپورٹ انوسٹی گیشن پولیس حکام کو بھجوائی گئی تو انہوں نے اس معاملے کو اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ میں بھجوانے کا فیصلہ کیا تا کہ انصاف کے تقاضے پورے ہوں اور اس گھناؤنے کھیل میں ملوث فرضی ایماندار پولیس افسروں کے چہروں سے نقاب اتر سکے ۔ذرائع کاکہنا ہے کہ ڈی ایس پی لیگل نے اپنے اہلکاروں کو بچانے کے لئے تفتیش کاروں کو کئی فون کالز بھی کیں لیکن انوسٹی گیشن ونگ کے اعلی افسر انتہائی ایماندار اور پروفیشنل ہیں جس کے باعث تفتیشی ٹیموں نے کسی کا دباؤ قبول کرنے سے انکار کر دیا۔ بتایا گیا ہے کہ مالخانے میں تعینات اہلکاروں نے گرفتاری پرانکشاف کیا کہ لاہور پولیس نے مختلف اوقات میں غیر ملکی شراب کے دو کنٹینرز پکڑے جنکے ملزمان کو گرفتار کر کے جیل بھجوایا گیا جبکہ ضروری کارروائی کے بعد شراب کے کنٹینرز صدر مالخانے جمع کرا دیئے گئے۔ڈی ایس پی لیگل ناصر پنجوتہ کے ماتحت صدر مالخانے اور وئیر ہاؤس کا انچارج ہیڈ یوسف ہیڈ کانسٹیبل شوکت کانسٹیبل انوار الحق اور صدیق نے ملزمان سے ساز باز ہو کر شراب کے کنٹینرز بالترتیب ، 32اور 25لاکھ میں فراخت کر دیئے جبکہ اس کرپشن کو قانونی شکل دینے کے لئے بعدازاں اپنے اعلی اور ماہر افسر کے اختیارات کے باعث ماتحت عدالت سے شراب کی تلفی کے احکامات حاصل کر لئے ۔ذرائع کا کہناہے کہ ملزمان مالخانے میں مذید خرد برد کے بھی انکشافا ت کئے جن کے بارے مذید تحقیقات کا عمل جا ری ہے ۔