سوڈان کی فوجی کونسل کے سربراہ سابق صدر کا تختہ الٹنے کے ایک دن بعد مستعفی

سوڈان کی فوجی کونسل کے سربراہ عود بن عوف نے سابق صدر عمر البشیر کا تختہ الٹنے کے ایک دن بعد ہی استعفیٰ دے دیا ہے۔
غیر ملکی میڈیا کے مطابق عود بن عوف نے اپنے استعفی کا اعلان سرکاری ٹی وی پر کیا، فوجی کونسل کے سربراہ عود بن عوف نے لیفٹیننٹ جنرل عبدالفتاح عبدالرحمان برہان کو اپنا جانشین نامزد کیا، فوج کا کہنا ہے کہ دو سال تک اقتدار میں رہنے کے بعد انتخابات کرائے گی۔
غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ تین ماہ سے جاری احتجاجی مظاہرے کے نتیجے میں عمر البشیر کی حکومت ختم ہونے باوجود سوڈان میں سیاسی صورتحال تاحال بحران کا شکار ہے۔ سوڈان میں مظاہرین مظاہرین سڑکوں پر سراپا احتجاج ہیں، مظاہرین کا مطالبہ ہے کہ اقتدار شہریوں (سویلین حکومت) کو منتقل کیا جائے۔
گذشتہ روز سوڈان میں فوج کے ہاتھوں صدر عمر البشیر کی برطرفی اور اقتدار فوج کے ہاتھ میں لینے کے بعد امریکا اور یورپی یونین کی طرف سے سلامتی کونسل کا ہنگامی اجلاس ہوا تھا،ج س میں سوڈان کی تازہ سیاسی صورت حال پر غور کیا گیا تھا۔
اس سے پہلے سوڈان کےصدر عمر البشیر کا تختہ الٹنے کے بعد تشکیل پانے والی عبوری فوجی کونسل کی سیاسی کمیٹی کے سربراہ عمر زین العابدین کا کہنا ہے کہ ملکی بحران کا حل فوج نہیں بلکہ عوام تجویز کریں گے۔