بلاگر بلال خان قتل کیس: ڈی جی آئی ایس پی آر نے حقائق سے کیا روشناس

 ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے بلاگر بلال خان کے قتل کو بے رحمانہ قرار دیتے ہوئے اس کی مذمت اور مقتول کیلئےمغفرت کی دعا کی ہے۔
ڈی جی آئی ایس پی آر نے بلال خان کا ایک ٹویٹ ری ٹویٹ کیا جو اس وقت کا تھا جب آصف غفور کی سوشل میڈیا پر پاکستان مخالف پراپیگنڈا کرنے والے بلاگرز کے ساتھ تصویر سامنے آئی تھی۔ آصف غفور کی اکتوبر 2018 میں سامنے آنے والی اس تصویر پر خوب ہنگامہ برپا ہوا تھا ، اس تصویر پر بلاگر بلال خان نے بھی تنقید کی تھی۔ بلال خان نے تصویر کے حوالے سے ڈی جی آئی ایس پی آر کو ایک پیغام بھی بھیجا تھا جس کا جواب آنے پر انہوں نے تصویر کی حقیقت کی وضاحت کی تھی۔

آج دن بھر @OfficialDGISPR کی تصویر موضوع بحث رہی، اس تصویر پر مجھ سمیت ہزاروں کو دکھ ہوا، مگر درحقیقت یہ ان بھگوڑے ملک دشمن اور گستاخانہ پیجزچلانے والے بلاگرزکی شاطری اور عیاری تھی کہ فراڈ کےذریعے پروپیگنڈہ کیا، جنرل آصف غفور صاحب @peaceforchange کا رسپانس پڑھیے اور اصل رخ جانیے۔ pic.twitter.com/4DuX6aSoqo
— Muhammad Bilal Khan (@BilalKhanWriter) October 14, 2018
 
ڈی جی آئی ایس پی آر نے بلال خان کا یہ ٹویٹ ری ٹویٹ کرتے ہوئے ان کے قتل کو بے رحمانہ قرار دیا اور اس کی بھرپور مذمت کی  ۔ انہوں نے کہا کہ کچھ لوگ اور مغربی میڈیا کا ایک مخصوص حصہ نوجوان بلاگر کے قتل کاالزام ریاستی ایجنسیوں پر عائد کرنے کا مذموم پراپیگنڈا کر رہا ہے جو قابل مذمت ہے۔ ڈی جی آئی ایس پی آر نے مقتول بلاگر کیلئے دعائے مغفرت بھی کی۔ 

Brutal killing of Muhammad Bilal Khan is condemnable. So is ill intended propaganda to implicate state agencies by few individuals and certain segment of western media. May Allah bless his soul. Aamen. https://t.co/QHXqDSyQVr
— Asif Ghafoor (@peaceforchange) June 18, 2019