قومی ٹیم میں اختلافات اور گروپنگ، سرفراز کو گھیر لیا صحافیوں نے اور کر دی سوالات کی بوچھاڑ

ورلڈ کپ میں بھارت کے ہاتھوں شکست کے بعد قومی ٹیم میں اختلافات اور گروپ بندی کی خبریں زیر گردش ہیں اور اس صورت حال پر پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد بھی میڈیا کا سامنا کرنے کے لیے تیار نہیں ہیں۔

ورلڈ کپ میں پے در پے شکستوں کے بعد قومی ٹیم کے کھلاڑیوں اور کپتان سرفراز احمد کو شدید تنقید کا سامنا ہے۔

اس کے علاوہ یہ خبریں بھی زبان زدِعام ہیں کہ ٹیم میں گروپنگ اور سرفراز احمد کے خلاف سازشیں جاری ہیں اور کھلاڑی ہیڈ کوچ مکی آرتھر سے بھی نالاں ہیں۔

اس صورت حال میں پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد جب لندن پہنچے تو اُنہیں صحافیوں نے گھیر لیا اور سوالات کی بوچھاڑ کر دی۔

قومی ٹیم میں اختلافات سے متعلق سوال پر سرفراز احمد نے کہا کہ یہ سوال آپ قومی ٹیم کے میڈیا منیجر رضا سے پوچھیں، پھر بات کر لیں گے، جس کے بعد مزید کچھ کہے بغیر سرفراز احمد اپنے بیٹے عبداللہ کو گود میں لیکر ہوٹل روانہ ہو گئے۔