ورلڈکپ: بھرپور مقابلے کے باوجود بنگلادیش کو آسٹریلیا کے ہاتھوں شکست

کرکٹ ورلڈ کپ کے 26 ویں میچ میں آسٹریلیا نے بنگلا دیش کو 48 رنز سے شکست دیدی۔

ناٹنگھم کے ٹرینٹ برج گراؤنڈ میں دونوں ٹیموں کے درمیان میچ پاکستانی وقت کے مطابق دوپہر ڈھائی بجے شروع ہوا۔

آسٹریلیا کی جانب سے ایرون فنچ اور ڈیوڈ وارنر نے اننگز کا آغاز کیا اور دونوں کھلاڑیوں نے اپنی ٹیم کو 121 رنز کا اچھا آغاز فراہم کیا۔

آسٹریلیا کے پہلے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی ایرون فنچ تھے جو 53 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے جس کے بعد عثمان خواجہ بیٹنگ کرنے کے لیے آئے۔

عثمان خواجہ نے بھی وارنر کا خوب ساتھ دیا اور اپنی نصف سنچری اسکور کی جب کہ وارنر نے حالیہ ورلڈ کپ میں اپنی دوسری سنچری اسکور کی اور وہ 5 چھکوں اور 14 چوکوں کی مدد سے 166 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔

عثمان خواجہ نے بھی 89 رنز بنائے جب کہ میکسویل نے 10 گیندوں پر 32 رنز کی جارحانہ اننگز کھیلی۔

آسٹریلیا نے مقررہ 50 اوورز میں 5 وکٹوں کے نقصان پر 381 رنز اسکور کیے۔ بنگلا دیش کی جانب سے پارٹ ٹائم بولر سومیہ سرکار نے تین کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا جب کہ مستفیض الرحمان کے حصے میں ایک وکٹ آئی۔

بنگلا دیش کی جانب سے اننگز کا آغاز سومیہ سرکار اور تمیم اقبال نے کیا لیکن سومیہ سرکار 10 رنز بنا کر ایرون فنچ کی شاندار تھرو پر رن آؤٹ ہو گئے۔

پہلی وکٹ جلد گرنے کے بعد تمیم اقبال اور شکیب الحسن نے ذمہ دارانہ طریقے سے اپنی ٹیم کا اسکور آگے بڑھایا اور 102 رنز پر شکیب الحسن 41 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئے۔

تمیم اقبال نے بھی 62 رنز کی عمدہ اننگز کھیلی جب کہ محموداللہ نے بھی 69 رنز کی جارحانہ اننگز کھیلی۔

بنگلا دیش کے وکٹ کیپر بلے باز مشفیق الرحیم نے آسٹریلوی بولرز کا ڈٹ کر مقابلہ کیا، مشفیق الرحیم اپنی ٹیم کو کامیابی سے ہمکنار تو نہ کرا سکے لیکن وہ 102 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔

بنگلادیش نے مقررہ 50 اوورز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر 333 رنز بنائے اور اس طرح اسے اچھا مقابلہ کرنے کے باوجود آسٹریلیا کے ہاتھوں 48 رنز کی شکست کا سامنا کرنا پڑا۔

آسٹریلیا کی جانب سے مچل اسٹارک، ناتھن کارٹرنیل اور اسٹوئنس نے دو دو کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا جب کہ ایڈم زمپا کے حصے میں ایک وکٹ آئی۔