امیر قطر کی پاکستان آمد: شاہ محمود قریشی کی اپنے قطری ہم منصب سے ملاقات

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ امیر قطر کے دورہ پاکستان سے دونوں ملکوں کے درمیان تجارت کی نئی راہیں کھلیں گی اور سرمایہ کاری میں اضافہ ہو گا۔ پاکستان قطر کے ساتھ دو طرفہ تعلقات کو خصوصی اہمیت دیتا ہے۔
تفصیلات کے مطابقوزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کی نور خان ایئربیس پر قطر کے نائب وزیر اعظم اور وزیر خارجہ شیخ محمد بن عبدالرحمان آل ثانی سے ملاقات۔ وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے اپنے قطری ہم منصب کو پاکستان آمد پر خوش آمدید کہا۔ دوران ملاقات دو طرفہ تعلقات اور قطر کے امیرشیخ تمیم بن حمد الثانی کے دورہ پاکستان کے حوالے سے تبادلہ خیال ہوا۔ شاہ محمود قریشی نے اپنے قطری ہم منصب سے ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان اور قطر کے تعلقات ہمیشہ قریبی اور دوستانہ رہے ہیں۔
پاکستان قطر کے ساتھ دو طرفہ تعلقات کو خصوصی اہمیت دیتا ہے،رواں سال جنوری میں وزیراعظم عمران خان نے قطر کا دورہ کیا اور دوطرفہ تعلقات کو مزید مستحکم بنانے کیلئے قطر کی قیادت سے بات چیت ہوئی۔انہوں نے کہا کہ قطر میں ایک لاکھ پچیس ہزار سے زائد پاکستانی قطر کی تعمیر و ترقی میں اپنا کردار ادا کر رہے ہیں،قطر میں مقیم یہ پاکستانی دونوں ملکوں کے درمیان پل کا کردار ادا کرتے ہیں۔شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ قطر پاکستان میں توانائی کے بحران کے خاتمے کے لیے اہم کردار ادا کر رہا ہے،دونوں ملکوں کے درمیان تجارتی حجم ڈھائی ارب ڈالر سے زائد سطح تک پہنچ چکا ہے اور گزشتہ کچھ عرصے میں باہمی تجارت کے حجم میں نمایاں اضافہ ہوا ہے ۔
اس موقع قطر کے وزیر خارجہ شیخ محمد بن عبدالرحمان آل ثانی کا کہنا تھا کہ قطر پاکستان میں مختلف شعبوں میں سرمایہ کاری میں دلچسپی رکھتا ہے جبکہ دو ہزار بائیس کے فیفا ورلڈ کپ کےلیے قطر پاکستان سے ایک لاکھ سے زائد افرادی قوت درآمد کرنے کا خواہاں ہے۔