مکی آرتھر کے بعد اظہر محمود بھی شدید پریشان

برمنگھم (ویب ڈیسک) مکی آرتھر کے بعد اظہر محمود بھی خودکشی کی باتیں کرنے لگے۔

برمنگھم میں میڈیا سے گفتگوکرتے ہوئے بولنگ کوچ نے کہا کہ آپ کو کوئی مثبت چیز نظر آئے تو بندہ کہہ سکتا ہے کہ جینے کا کوئی مقصد ہے۔

ہم میچ ہار جائیں تو ایسا لگتا ہے کہ دنیا ہی ختم ہوگئی،اسی وجہ سے دل چاہتا ہے کہ بندہ خود کشی کرلے زہر کھالے۔

انہوں نے مزید کہا کہ حارث سہیل کے 70منٹ میں تھک جانے کی بات بھی منفی تھی، لوگوں کو مثبت چیزیں نظر نہیں آتیں۔

انہوں نے کہا ہے کہ ہر وقت منفی باتوں سے کھلاڑیوں پر بھی دباوٴ آجاتا ہے۔ انہوں نے کہاہے کہ نیوزی لینڈ کی ٹیم سارے میچز جیت چکی ہے لیکن ہر ٹیم کا برا دن ضرور آتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ امید ہے کہ نیوزی لینڈ کیلئے وہ دن پاکستان سے میچ میں ہو۔ ایک سوال پوچھے جانے پر سابق اظہر علی نے کہا کہ کوئی کھلاڑی جان بوجھ کر کیچ نہیں چھوڑتا اور کوشش ہورہی ہے کہ قومی ٹیم کا اعتماد بحال کیا جائے۔

گزشتہ میچز میں ناکامی کی وجہ بتائے بغیر انہوں نے کہا کہ پچھلے میچ میں گراوٴنڈ فیلڈنگ اچھی تھی لیکن کیچز ڈراپ ہوگئے۔

ایک اور سوال کے جواب میں سابق آل راؤنڈر کا کہنا تھا کہ پاکستان نے نیوزی لینڈ کیخلاف کافی کرکٹ کھیلی ہے اور اس حریف کی طاقت اور کمزوری کا اندازہ ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کو میچ جیتنے کیلئے تینوں شعبوں میں اچھا کھیلنا پڑے گا۔

انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان ٹیم کا ورلڈ کپ کا سفر جاری ہے اور امید ہے کہ ٹیم باقی میچز بھی جیت جائے گی۔

سابق آل راوٴنڈر نے عندیہ دیا ہے کہ پاکستانٹیم نیوزی لینڈ کے خلاف بغیر تبدیلی کے ہی میدان میں اترے گی لیکن ساتھ ساتھ انہوں نے یہ بھی کہا کہ ابھی وکٹ نہیں دیکھی البتہ صبح کنڈیشن دیکھ کر فائنل الیون کا فیصلہ کیا جائے گا۔

گزشتہ دنوں قومی کرکٹ ٹیم کے ہیڈ کوچ مکی آرتھر نے بھی انکشاف کیا تھا کہ بھارت کے خلاف میچ میں پاکستانی ٹیم کی ناکامی کے بعد انہوںنے خودکشی کے بارے میں سوچا تھا ۔