لیگی رہنما احسن اقبال کے ٹویٹ کا اداکارہ وینا ملک نے ایسا جواب دے دیا کہ آپ بھی یقین نا کر پائیں گے

سیاست کے دھندے میں مخالفین کا ناطقہ بند کرنا شاید اولین ترجیح ہوتی ہے۔ لیگی رہنما احسن اقبال نے موجودہ صورتحال کے تناظر میں سوشل میڈیا پر شاعرانہ شکوہ کیا تو جواب میں پی ٹی آئی سے گہری وابستگی رکھنے والی اداکارہ وینا ملک نے اسی انداز میں گہرا وار کرڈالا۔
نیب کی جانب سے ن لیگ کے اہم رہنمائوں کی گرفتاریوں کا سلسلہ جاری ہے۔ اسی حوالے سے ایل این جی اسکینڈل میں شاہد خاقان عباسی کی گرفتاری کے بعد احسن اقبال نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹویٹر پراپنی پوسٹ میں شاعری کے ذریعے اپنا احتجاج ریکارڈ کرایا۔احسن اقبال نے دراصل معروف شاعر منظر بھوپالی کی غزل لکھی لیکن نہ جانے کس مصلحت کے تحت آخری شعرنہ لکھا جو آپ یہاں پڑھ لیجئے۔

طاقتیں تمہاری ہیں اور خدا ہمارا ہے عکس پر نہ اِتراؤ، آئینہ ہمارا ہےآپ کی غلامی کا، بوجھ ہم نہ ڈھوئیں گےآبرو سے مرنے کا، فیصلہ ہمارا ہے عمر بھر تو کوئی بھی، جنگ لڑ نہیں سکتاتم بھی ٹوٹ جاؤ گے، تجربہ ہمارا ہے اپنی رہنمائی پر، اب غرور مت کرناآپ سے بہت آگے، نقشِ پا ہمارا ہے
— Ahsan Iqbal (@betterpakistan) July 18, 2019
جواب میں حکومت وقت سے گہری وابستگی رکھنے والی وینا ملک کو یہ انداز بالکل نہ بھایا اور انہوں نے ٹکر کا جواب دے ڈالا۔وینا کی ٹویٹ پر پی ٹی آئی کے حامیوں نے دادوتحسین کے ڈونگرے برسا دیے لیکن دلچسپ پہلو یہ ہے کہ اس شاعری کو وینا سے منسوب کرتے ہوئے ان کی ذہانت کے گن گائے جائے رہے ہیں کہ وینا جی نے کمال کردکھایا۔ایک صاحبہ نے تو حد ہی کردی۔ اپنی ٹویٹ میں بڑے بڑے شعراءکو وینا ملک کے آگے صفر قرار دے دیا۔حقیقت یہ ہے کہ احسن اقبال کے منقول شکوے کا وینا ملک نے جواب بھی منقول ہی دیا۔
 

لُوٹ کی کمائی ھےجھوٹ پر گزاراھےذلتوں بھرا جیون سب کا سب تمہاراھےغیرتِ الٰہی کی نسبتیں ہیں غیرت سے کیسےوہ تمہارا ہو، جوخدا ہماراھے دیس میں کرپشن کا اژدھا کچلنےکو قدرتِ الٰہی نے خان کو اتاراھےچُلو بھر ہزیمت کا پانی ہم تمہیں دیں گےاُس میں ڈوب مرنےکا فیصلہ تمہاراھے https://t.co/Fz4WXqDeRq
— VEENA MALIK (@iVeenaKhan) July 19, 2019
وینا کی جانب سے جوابی شاعری نعیم ضرار کی ہے جو انہوں نے غالبا احسن اقبال کی ٹویٹ کے بعد کی۔ نعیم ضرار نے ایک ری ٹویٹ کے ذریعے آفیشل ٹوئٹر پیج پر یہ غزل ’چماٹ شکوہ“ کے نام سے شیئر کی ہے۔وینا ملک کیلئے دادوتحسین کے ڈونگرے برستے دیکھ کر ایک صارف نے نشاندہی کی کہ یہ تو نعیم ضرار کی غزل ہے۔اپنی پہچان کرائے جانے پر شاعر نے بھی اظہار تشکر کیا۔