علی رضا عابدی قتل کیس نے لیا اک نیا رخ، کیا اہم پیش رفت ہوئی؟

انسداد دہشتگردی کی عدالت نے علی رضا عابدی قتل کیس کے تین ملزمان کی درخواست ضمانت مسترد کر دی ہے۔
تفصیلات کے مطابق انسداد دہشتگردی عدالت نے گزشتہ سال دسمبر میں گھر کی دہلیز پر قتل ہونے والے ایم کیو ایم پاکستان کے رکن قومی اسمبلی علی رضا عابدی کے قتل کیس کی سماعت کے دوران ملزم ابوبکر، محمد غزالی اور فاروق کی درخواست ضمانت پر فیصلہ سناتے ہوئے تینوں ملزمان کی درخواست ضمانت مسترد کر دی ہے۔
دوران سماعت عدالت نے ریمارکس دیئے کہ ملزمان پر سہولت کاری کے شواہد موجود ہیں ضمانت پر رہائی کا حکم نہیں دے سکتے، پولیس کا کہنا تھا کہ ملزمان علی رضا عابدی کے قاتلوں کے سہولت کار ہیں۔واضح رہے کہ مقتول علی رضا عابدی کو پچیس دسمبر 2018 کو ڈیفنس فیز 5 کے علاقے خیابان غازی میں ان کے گھر کے باہر فائرنگ کا نشانہ بنایا گیا تھا،پولیس نے اس واقعے کو ٹارگٹ کلنگ قرار دیا تھا۔