محمد عامر کی فیصلے پر وسیم اکرم حیران

قومی کرکٹ ٹیم سابق کپتان وسیم اکرم نے محمد عامر کی ٹٰیسٹ کرکٹ سے ریٹائرمنٹ لینے پر حیرانی کا اظہار کیا۔ وسیم اکرم نے سوشیل میڈیا پر محمد عامر کی ریٹائرمنٹ پر حیرانی کا اظہار کرتے ہوئے لکھا کہ فاسٹ بولر 27 سال کی عمر میں عروج حاصل کرتا ہے وہ ریٹائر ہوگئے۔

وسیم اکرم کا مزید کہنا تھا کہ بولر کا اصل امتحان ٹیسٹ کرکٹ میں ہوتا ہے، محمد عامر کے ریٹائرمنٹ کے فیصلہ کر کے بڑی غلط فیصلہ کیا۔

وسیم اکرم کا کینا ہے کہ پاکستان نے اس سال آسٹریلیا میں دو، اگلے سال انگلینڈ میں تین ٹیسٹ کھیلنے ہیں، پاکستان کو آسٹریلیا اور انگلینڈ سے ٹیسٹ سیریز میں عامر کی ضرورت پڑے گی۔

دوسری جانب شاہد خان آفریدی نے محمد عامر کے ٹیسٹ کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کے فیصلے کو درست قرار دیتے ہوئے کہا کہ آپ پاکستان کے لیے ون ڈے کرکٹ طویل عرصے تک کھیل سکتے ہیں۔

آفریدی کا کہنا تھا کہ محمد عامر کے ٹیسٹ کرکٹ میں میچ وننگ اسپیلز کو ہمیشہ یاد رکھا جائے گا، مستقبل کے لیے نیک تمنائیں ہیں۔

 گزشتہ روز پی سی بی نے کہا تھا کہ فاسٹ بولر محمد عامر نے ٹیسٹ کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا اعلان کردیا گیا ہے کہ وہ ون ڈے اور ٹی ٹوینٹی کرکٹ کھیلتے رہیں گے۔

اس موقع پر محمد عامر کا کہنا تھا کہ ٹیسٹ کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا فیصلہ آسان نہیں تھا، ٹیسٹ میں پاکستان کی نمائندگی کرنا میرے لیے اعزاز تھا۔