آئی فون کا چارجر پھٹنے سے خاتون کی گردن متاثر

آئی فون کے چارجر میں اسپارک ہونے سے خاتون کی گردن جل گئی، خاتون کو اسپتال منتقل کردیا گیا۔
امریکی ریاست مشی گن میں خاتون اس وقت اپنی گردن جلا بیٹھی جب وہ آئی فون کو چارج کرنے کے لیے پلک میں لگا رہی تھی کہ پلک میں صحیح طرح سے چارجر نہ لگنے کی وجہ سے اس میں آگ بھڑک اٹھی۔
خاتون نے نیکلیس پہنا ہوا تھا جس کی وجہ سے اس کی گردن متاثر ہوئی تھی، خاتون کی عمر 19 سال بتائی گئی ہے تاہم ان کا نام ظاہر نہیں کیا گیا ہے۔ خاتون کوزخمی حالت میں مشی گن کے مقامی اسپتال منتقل کیا گیا جہاں ڈاکٹرز نے اس کی چوٹ کو دوسرے درجے کی قرار دیا۔
ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ خاتون کی ایکسرے رپورٹ کلیئر آئی ہے انہیں کوئی دوسری انجری نہیں ہوئی ہے۔ خاتون کی گردن سے نیکلیس اتار کر انہیں طبی امداد کی فراہمی کے بعد اسپتال سے ڈسچارج کردیا گیا ہے۔
ڈاکٹر کیریسا کا کہنا ہے کہ موبائل چارج کرتے وقت چارجر خاتون کے نیکلیس سے ٹکرا رہا تھا جس کی وجہ سے خاتون کو کرنٹ لگا ہے۔ ڈاکٹر برنس کا کہنا تھا کہ کم وولٹیج کی وجہ سے بھی اس طرح کے حادثات پیش آتے ہیں یا پھر وولٹیج ایک دم زیادہ آجائیں تو بھی موبائل بیٹری یا چارجر پھٹ جاتا ہے۔
رپورٹ میں خاتون اور بچوں کو آگاہی فراہم کرنے کے لیے کہا گیا ہے کہ موبائل چارج کرتے وقت احتیاط برتیں اور موبائل کو سوتے وقت اپنے سے دور رکھیں۔رپورٹ کے مطابق آئی فون کے 64 چارجر میں سے 58 فی صد چارجرز الیکٹریکل اسٹرینتھ ٹیسٹ میں فیل ہوگئے ہیں۔