دانتوں کی صحت کتنی ضروری؟

ایک خوبصورت مسکراہٹ چہرے کی خوبصورتی میں اضافہ کرتی ہے۔ اور مسکراہٹ کو دلکش بنانے کے لیے دانتوں کی صحت کو برقرار رکھنا بہت ضروری ہے۔
یہ قول ہم نے بچپن سے سن رکھا ہے کہ صفائی نصف ایمان ہے۔ لیکن سوچنے کی بات یہ ہے کہ کیا واقعی ہم اس نصف ایمان کے حامل ہیں ۔ مسواک کرنے کے 72 فائدے ہیں۔ صرف چند سامنے نظر آنے والے دانتوں کو صاف کر لینا کافی نہیں ہوتا بلکہ صیحح طریقے سے زبان اور دانتوں کی صفائی کرنی چاہیے۔ کیونکہ کئی بیماریاں انسانی جسم میں منہ کے ذریعے داخل ہوتی ہیں۔ برش نہ کرنے سے کھانا دانتوں میں رہ جاتا ہے جو بعد میں بیکٹیریا کی شکل اختیار کرلیتا ہے جس کی وجہ سے منہ سے بدبو بھی آنے لگتی ہے اور کئی بیماریاں جن میں دانتوں میں کیڑا لگنا, دانتوں میں درد, مسوڑوں کا سوج جانا , منہ کا السر وغیرہ کا خدشہ ہوتا ہے۔
اس بات کا خیال رکھنا بھی بہت ضروری ہے کے دانتوں کی صفائی کے لیے استعمال کیا جانے والا ٹوتھ برش زیادہ پرانا نہ ہو۔ دانتوں کوکم از کم 2منٹ کے لیے برش کریں۔ دن میں 3مرتبہ برش کریں صبح ناشتہ کرنے کے بعد لازمی برش کریں اور سونے سے پہلے برش کر کے سوئیں۔ کچھ بھی کھانے کے بعد کلی لازمی کریں ۔دانتوں میں باقاعدگی سے خلال کرنا بھی دانتوں کو سفید اور چمکدار رکھتا ہے۔
زیادہ میٹھی چیزوں سے گریز کریں میٹھی چیزوں سے دانتوں میں کیڑا لگنے کا خدشہ ہوتا ہے کاربوہائیڈریٹ مشروبات سے بھی پرہیز کریں۔ کاربوہائیڈریٹس مشروبات آپکے دانتوں کی پہلی تہہ کو ختم کر دیتی ہیں۔ جس کی وجہ سے بیکٹیریا دانتوں پر جلدی لگ جاتا ہے اور دانتوں میں انفیکشن ہونے کا خطرہ لاحق ہو جاتا ہو۔
صحت مند دانت، صحت مند جسم اور صحت مند زندگی کے لیے ضروری ہیں۔