تاریخی جہاز دنیا کا چکر لگانے نکل پڑا

برطانیہ کا قدیم تاریخی جہاز دنیا کا چکر لگانے نکل پڑا، آزادی کی علامت مانے جانے والے اس جہازکو دوسری جنگ عظیم میں استعمال کیا گیا تھا۔
دو برطانوی ہوابازاسٹیو بروکس اور میٹ جونس نے اسپٹ فائر میں ورلڈ ٹور کے لیے روانہ ہو ئے۔ یہ طیارہ 30 ممالک سے ہوتا ہوا 5 ماہ میں 27000 میل کی مسافت طے کرے گا۔
ایک سیٹ پر مشتمل جہاز اسپٹ فائر کو برطانیہ میں سپر میرین اسپٹ فائر بھی کہا جاتا ہے۔ یہ جنگی طیارہ دوسری جنگ عظیم میں برطانیہ کی جانب سے استعمال کیا گیا تھا۔ اسپٹ فائر برطانوی واحد نشست کا لڑاکا طیارہ ہے جسے دوسری جنگ عظیم بڑے پیمانے پر تیار کیا گیا تھا اور حکمت عملی کے لحاظ سے اہم برطانوی لڑاکا طیارہ ہے۔
اب اسے دوبارہ عسکری شکل دے دی گئی ہے۔ برطانیہ کا ایک سیٹ پر مشتمل اس جہاز کا ڈئزائن آر سی میچلز نے 1937 میں بنایا تھا۔ لیکن اسے مکمل نہیں کر سکا تھا۔ کینسر کے باعث میچلز کی موت کے بعد اسی ڈئزائن پر عمل کرتے ہوئے اس کے ساتھی جوزف سمتھ نے اس کو مکمل کیا تھا۔